ریاض: 53 سعودی خواتین بطور پبلک پراسیکیوشن تعینات

ریاض: (4 جون 2020) سعودی عرب میں خواتین کو پبلک پراسیکیوشن میں تعینات کرنے کا شاہی فرمان جاری کیا گیا ہے۔ جس کے مطابق تریپن خواتین کو لیفٹیننٹ کے عہدے پر پبلک پراسیکیوشن کے طور پر تعینات کیا گیا ہے۔

سعودی پبلک پراسیکیوشن کے ترجمان ڈاکٹر ماجد الدسیمانی نے بتایا ہے کہ لیفٹیننٹ کے عہدے پر تعینات تریپن خواتین ملک کے مختلف علاقوں میں پبلک پراسیکیوشن کی شاخوں میں اپنے فرائض انجام دیں گی۔ یہ خواتین سے تعلق رکھنے والے تنازعات اور مقدمات میں انویسٹی گیشن کا کام کریں گی۔

ترجمان کے مطابق پبلک پراسیکیوشن کے رکن کے طور پر خواتین کی تقرری کا فیصلہ سعودی وژن دو ہزار تیس کے اہم نصب العین کی تکمیل کے لیے ہوا ہے۔ خواتین کو ان کی ذمہ داریوں کی بابت تمام تفصیلات سائنٹفیک بنیادوں پر سمجھائی گئی ہیں۔ انہیں ایک طرف نظریاتی کورس کرایا گیا اور دوسری جانب پبلک پراسیکیوشن کے فرائض اور عدالتی ذمہ داریوں کی باقاعدہ ٹریننگ دی گئی ہے۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: