آخری عشرہ نجات کا – قانتہ رابعہ

آخری عشرہ شروع ہوچکا ہے……. احادیث اور قرآن سے ثابت ہے کہ یہ طاق راتیں سارے سال کا سب سے قیمتی سرمایہ ہین ۔ پورے سال کی راتوں کی برکات سمیٹ کر آخری عشرہ میں اور آخری عشرہ کی طاق راتوں میں اور طاق راتوں کی لیلہ القدر میں سمیٹ دی جاتی ہین ۔۔پس کیسا بدبخت ہوگا وہ جو ان طاق راتوں میں بھی محروم رہا .

میں اکثر سوچتی ہوں کہ کئ مرتبہ بازار میں جائیں اور فہرست پاس نہ ہو تو ذہن پر زور ڈال کے یاد کرتے ہیں کہ ہائے کوی چیز لینا تھی….. یاد نہیں آرہی ۔ پس میری پیاری بیٹیو بہنو….. آپ عمر میں مجھ سے ضرور چھوٹی ہوں گی مگر نیک اعمال میں یقینی طور پر بہت آگے ہیں ۔۔میں آپ سے درخواست کرتی ہوں کہ طاق راتوں میں دو سو چار سو نوافل کی بجاے ۔۔سوچنے کا کام کیجئیے ۔۔ذہن پر زور دیں زندگی کے بازار میں کیا لینے آے تھے مگر بے ہنگم زندگی میں بھول بیٹھے ہین ۔ ویسے بھی رمضان کے لئے جو لوازمات درکار ہیں اس بازار میں کامیاب سودے بازی کے لیے وہ ۔ من قام لیلہ الصیام۔۔۔جو رمضان کی راتوں میں حالت قیام میں رہا . دوسرا یہ کہ ۔۔من صام رمضان ایمانا و احتسابا۔۔جو رمضان میں ایمان اور احتساب کے ساتھ روزے رکھے اس کےاگلے گناہ معاف کردئیے جائیں گے ……. پس اپنے اخری عشرے میں چند چیزیں لازم کر لیجئیے ۔۔۔

نوافل یا سیپاروں کی گنتی کی بجاے کوالٹی کو فوکس رکھیں دو نفل سے اس رات کا آغاز کریں اور خدا کے حکم کے تحت ان دنوں میں نماز کی ادائیگی سے محروم ہیں وہ اس وقت کو ضائع مت کرین یہ نیت بنائین کہ اگر میں پاکیزگی کی حالت میں ہوتی تو ضرور ادا کرتی ۔۔لیجئیے بیٹھے بٹھاے نوافل کا ثواب مل گیا ہاں اس عرصہ میں وہ کثرت سے ذکر اذکار کر سکتی ہیں ہاتھ پھیلا کے دعا مانگ سکتی ہین۔۔۔رب سے رازو نیاز کر سکتی ہیں ۔۔۔اپنی گزشتہ زندگی کا جائزہ لے سکتی ہیں ۔۔آنے والی زندگی میں برکت اور خیر کی دعا کر سکتی ہیں ۔۔۔اس لیے کہ قسمتوں کو بنانے والی تقدیر ساز رات انہی طاق راتوں میں سے ایک ہے . ابن حبان فرماتے ہین طاق رات کی تیاری دن میں نیند اور صدقہ سے کرو . اس لیے گھر کے بھاری بھرکم کام یا افطاری میں بہت زیادہ مصروفیت سے پرہیز کرین آپ کے دن کی تھکاوٹ رات کی عبادت میں خلل پیدا کر سکتی ہے . مصحف سے دیکھ کے نفلی عبادت میں تلاوت کی جا سکتی ہے اس سے فائدہ اٹھائیے اپنے سامنے کسی میز یا کسی بھی اونچی جگہ پر قرآن رکھ کے نوافل ادا کرین ۔۔تنہائ مین یہ تلاوت بطور خاص تیسوان انتیسواں پارہ یا قیامت کے دن پر مبنی کوی بھی صورت دل گداز کرتی ہے

موبائل فون سائلنٹ پر لگا دین اس کی آواز بھی خشوع کے راستے کی رکاوٹ ہے . دعاوں کو دیکھ کے پڑھیں یا زبانی ساتھ میں اپنی مادری زبان میں ترجمہ کریں اس سے بہت لطف پیدا ہوتا ہے ۔محاسبہ کا عام فہم مطلب جائزہ ہے۔۔۔۔لوگوں نے آپ کے ساتھ کیا کیا نہیں اپ نے کیا کیا عبادات اور تعلقات میں آپ کا اپنا رویہ کیا رہا اور اس کی وجہ سے آپ کی موت یا موت کے بعد کی زندگی پر کیا اثرات مرتب ہوسکتے ہین ۔یہ بھی سوچئیے۔ کسی ڈرامہ کی قسط …… کوئی شاندار کہانی پڑھنا کسی قریب ہستی سے اس رات کے انمول لمحات کو ضائع کرنا ہے
۔اس رات اپنے آپ کو حالت اعتکاف میں تصور کیجئیے ۔۔۔غیر ضروری کیا ضروری باتوں خواہ وہ سامنے بیٹھے شخص سے ہوں یا سوشل میڈیا پر ۔۔پرہیز کیجئیے……فاقراو ما تییسر من القرآن ۔۔تلاوت سے تھک گئے تو دعا کےلیےہاتھ اٹھا لیں دعا مانگ کے تھک گئے تو ذکر اذکار …….. گنتی کے چند گھنٹے آپ کی رب کی رحمت اور عافیت کی لاٹری نکلوا سکتے ہین مانگئیے خیر ۔رحمت ۔برکت اس کی معرفت قربت نعمت صحت سب مانگئیے کہ نہ مانگنے والوں سے وہ ناراض ہوتا ہے اور وہ محبت جو ہم سب کی نجات اور بخشش کا باعث بن جاےامہات المومنین صحابہ کرام کے علاوہ انبیاء پر سلام بھیجئیے ……

ان کے بارے میں سوچئییے کہ کل روز قیامت جب ہماری ملاقات ہو تو ہماری آواز سے ہی وہ نیک ہستیاں ہمیں پہچان لین ۔وقت کم اور کام بہت ۔۔دعا اپنے لیے بھی کیجئیے امت مسلمہ کے لئے اور سب سے بڑھ کے ان کےلیے جن سے آپ کو کبھی رنج پہنچاہو ۔۔ان کے لیے بھی جو جا چکے اور ہماری دعاوں کے محتاج ہین ۔۔اللھم اغفر لھم وارحمہم ۔۔آمین

4 thoughts on “آخری عشرہ نجات کا – قانتہ رابعہ

  • May 15, 2020 at 3:37 PM
    Permalink

    بہترین تحریر ہے ماشاللہ ۔ بر وقت یاد دہانی ۔۔

    Reply
  • May 16, 2020 at 2:13 PM
    Permalink

    ماشاءاللہ بہت اچھی تحریر ہے ۔
    معلوماتی اور رمضان کی طاق راتوں کیلیئے اچھا تحفہ

    Reply
    • May 17, 2020 at 7:28 PM
      Permalink

      Zaberdast

      Reply
  • May 16, 2020 at 2:19 PM
    Permalink

    ماشاءاللہ ۔بہت اچھی تحریر ہے۔رمضان المبارک میں طاق راتوں کے حوالے سے معلوماتی اور پر اثر ۔

    Reply

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: